گرفتاری شہباز شریف کی نہیں جنرل عاصم سلیم باجوہ کی ہونی چاہیے تھی: مریم نواز

Rana sanaullah pmln youthwing
شہباز شریف، میاں نواز شریف کے ہر فیصلے کیساتھ ڈٹ کر کھڑے ہیں
September 24, 2020
Maryam nawaz, interview,
نواز شریف کا بیانیہ اسٹیلبشمنٹ کے خلاف نہیں بلکہ ‘حدود سے تجاوز کرنے’ کے خلاف ہے: مریم نواز
October 13, 2020
Show all

گرفتاری شہباز شریف کی نہیں جنرل عاصم سلیم باجوہ کی ہونی چاہیے تھی: مریم نواز

maryam nawaz, maryam nawaz sharif,
میاں شیباز شتریف کی گرفتاری پر پاکستان مسلم لیگ (ن) کے رہنمائوں کی پریس کانفرنس، کوئی یہ مت سمجھے کہ شہبازشریف کو جیل میں بند کرنے سے تحریک کو کوئی نقصان پہنچے گا بلکہ اس تحریک میں مزید جزبہ آئے گا آگ بھڑکے گی جتنے بھی لوگ کارکنان جو یہاں کھڑے ہیں جو پریس کانفرنس سن رہے ہیں وہ سب شہبازشریف ہیں وہ سب نوازشریف ہیں آپ چاہے شہباز شریف کو گرفتار کر لیں یا مریم نواز کو کو گرفتار کر لیں لیکن اے پی سی کے فیصلوں کے مطابق تحریک چلے گی اور پورے جذبے کے ساتھ چلے گی۔ عدلیہ نے بھی کہا کہ نیب سیاسی انجینیرنگ کرنےوالا ادارہ ہے شہباز شریف کو کسی جرم پر نہیں بھائی کے ساتھ کھڑے ہونے پر گرفتار کیا گی کبھی مولانا فضل الرحمان کونوٹس بھیجاجاتاہےکبھی شہبازشریف کوگرفتارکرلیاجاتاہے
  نہ ن کو شین اور نہ ہی شین کو ن سے الگ کیا جا سکتا ہے۔ مسلط شدہ خوفزدہ ہےاور وہ بزدل جی ایچ کیو میں پاریمانی لیڈرز کے  سامنے بیٹھنے سے گھبرا کر دوسرے کمرے میں منہ چھا کر بیٹھا رہا۔ آپ کہتے ہیں کہ استعفی دیا تو الیکشن کرا لیں گے- آپ کو اس کی مہلت کہاں ملے گی نواز شریف اور میرےبیانیے کا بوجھ اٹھانا ہرکسی کے بس کی بات نہیں۔ استعفے پرالیکشن کرانااتنا آسان نہیں ہے ،ن لیگ میدان میں کھڑی ہوگی ،لڑے گی ا نہیں نہ حکومت چلانے کاتجربہ ہے نہ عقل ہےنہ فہم و فراست ہے 
گرفتاری شہباز شریف کی نہیں جنرل عاصم سلیم باجوہ کی ہونی چاہیے تھی، جسکی ننانوے فرنچائزز اور اربوں ڈالر کے چھپے ہوئے اثاثے ہیں عاصم سلیم باجوہ کے خلاف اگر عدالتیں سوموٹو نہیں لیتیں تو پھر ہم اس معاملے کو رہبر کمیٹی میں بھی لیکر جائیں گے اور اے پی  سی میں بھی اٹھائیں گے۔ نیب کو نہ بی آر ٹی نظر آتی ہے نہ بسوں میں لگنے والی آگ نظر آتی ہے نیب کو نہ وزراکی کرپشن نظر آتی ہےنہ بنی گالا کااچانک ریگولرائزہونانظرآتاہے  

Leave a Reply